ہندوستان کو چین اور ایران کو امریکہ اسرائیل عرب اتحاد سے جنگ کے شدید خطرات

یاد رہے کہ ماضی میں بھی عرب ممالک اپنے مفادات کیلئےامریکہ کے ساتھ کھڑے رہے جب امریکہ نے افغانستان اور عراق کو بلڈوز اور پھر لیبیا ، یمن ، شام وغیرہ کو تباہ و برباد کیا تھا۔

ہندوستان اور چین کے مابین جنگ کا امکان اتنا ہی حقیقی ہے جتنا ایران پر امریکہ اور اسرائیل کا مشترکہ حملہ ہونے کا امکان ہے۔ جنوبی ایشیا اور بحیرہ جنوبی چین میں جنگی سرگرمیاں اور کشیدہ حالات جنگ کے شعلوں کا امکان ظاہر کر رہے ہیں۔ انتہائی اہم ہے کہ چین اب امریکی اتحاد کا مقابلہ کرنے کیلئے ایران اور ترکی کے ساتھ مل کر روس اور افغان طالبان کی عسکری حمایت حاصل کرنے کی تمام تر کوشش کر رہا ہے۔

ہندوستان کو ہمالیہ میں طاقت ور چین سے جنگ کے خطرات ہیں۔  جبکہ دوسری طرف متحدہ عرب امارات ، سعودی عرب ، اسرائیل اور امریکہ کی مشترکہ کوششوں سے  ایران کے خلاف جنگ کا قوی امکان ہے۔ یہ حالات پورے ایشیا کو تنازعات کا مرکز بنا رہے ہیں۔

ہندوستانی آرمی چیف جنرل ایم ایم ناراوانی ، متحدہ عرب امارات اور سعودی عرب کے دورے کے بعد حال ہی میں واپس آئے ہیں۔  بھارت دو طرفہ محاذ جنگ اور اندرونی بغاوت کیخلاف مہم جوئی کیلئے تیار نظر آتا ہے ، یعنی چین اور پاکستان کے ساتھ جنگ اور خالصتان کے مسئلے کو طاقت کے زور پر دبانے کی تیاریاں ہو رہی ہیں۔ چین نے واضح  کر دیا ہے کہ اگر نئی دہلی تائیوان کے معاملات میں مداخلت کرتی رہی تو بیجنگ شمال مشرقی بھارت کے علیحدگی پسندوں اور خالصتان کاز کی بہت اچھی طرح اور کھل کر حمایت کرسکتا ہے۔ 

پاکستان کے ٹیکٹیکل ایٹمی ہتھیاروں کے بارے میرا یہ کالم بھی پڑھیں

پاکستان کے ٹیکٹیکل ایٹمی ہتھیار حتف اور نصر بھارتی جارحیت کیلئے سڈن ڈیتھ

ہندوستان اپنے حریف پاکستان کے مقابلے میں واضع طور پر امریکہ اسرائیل متحدہ عرب امارات اور سعودی عرب کے ساتھ کھڑا نظر آتا ہے۔ سعودی عرب ہمیشہ سے امریکہ کا حلیف رہا ہے ، جس کے دباؤ پر تمام عرب قومیں ہندوستان کی حمایت میں نظر آ رہی ہیں۔ امکان ہے کہ متحدہ عرب امارات اور سعودی عرب باضابطہ طور پر پاکستان کو خیرباد کہہ رہے ہیں ۔ امریکی اقدامات چین کے ساتھ جنگ ​​کی دعوت جیسے ہیں اور اس کا فوری نتیجہ بھارت کا کڑا امتحان ہوگا ، کیونکہ چین دریائے برہم پتر کے پانی کو بھارت کیلئے روک دے گا۔ 

یاد رہے کہ ماضی میں بھی عرب ممالک اپنے مفادات کیلئےامریکہ کے ساتھ کھڑے رہے جب امریکہ نے افغانستان اور عراق کو بلڈوز اور پھر لیبیا ، یمن ، شام وغیرہ کو تباہ و برباد کیا تھا۔

ترکی پر امریکی پابندیاں پہلے سے موجود ہیں۔ اسی طرح کی پابندیاں چین اور پاکستان پر بھی لگائی جا رہی ہیں ۔ گذشتہ کئی دہائیوں سے ایران کو اسی طرح کی پابندیوں کا سامنا ہے۔ ایسا لگتا ہے کہ نئے امریکی صدر جوزف بائیڈن کے اقتدار سنبھالنے یا اس سے قبل ہی اسرائیل اور دیگر عرب ریاستیں ایران کیخلاف جنگ کی تیاری کر رہی ہیں

ایران نے اپنے جوہری سائنسدان محسن فخری زادے کو کھلے عام قتل کرنے کا الزام عائد کیا ہے۔ اور تل ابیب میں اسرائیلی انٹلیجنس موساد کے افسر فہمی حنوی کا قتل کرکے جوابی کارروائی کی ہے۔ مبینہ طور پر امریکہ کے چینی نژاد شہریوں کو روزمرہ کی دھمکیاں دی جارہی ہیں ۔

امریکی اشاروں کے تابع عرب ممالک اپنے دیرینہ حلیف پاکستان سے الگ ہو کر ہندوستان کی کھلی حمایت کر رہے ہیں۔ اور یہ بات معمولی نہیں ہے کہ امریکہ نے ہندوستان کو چین کیخلاف بھڑکانے کیلئے نریندر مودی کو یو ایس لیجنڈ آف میرٹ ایوارڈ سے نوازا ہے۔

تحریر : فاروق رشید بٹ

ترکی اور یورپی ممالک میں تنازعات پر میرا یہ کالم بھی پڑھیں

آذربائیجان سے بحیرہ روم تک کشمیر اور فلسطین کا حامی ترکی عالمی ٹارگٹ ہے

FAROOQ RASHID BUTThttp://thefoji.com
Farooq Rashid Butt alias Farooq Darwaish is an ex banker, a defence analyst, journalist, patriotic blogger, poet and freelancer WordPress web designer. A passionate flag holder of peace of the world

DEFENCE ARTICLES

بی جے پی راہنما راجیشور سنگھ کا کہنا ہے کہ بھارتیہ جنتا پارٹی کے مطابق 2021 تک...
دنیا کے جدید ترین طیاروں سے لیس ہندوستانی فضائیہ طیاروں اور عملے کی تعداد کے اعتبار سے...
مل ماسکو ہیلی کاپٹر پلانٹ روس کا تیار کردہ ایم آئی ۔ 35 ایم ملٹی رول اٹیک...
اسرائیلی اخبار یروشلم پوسٹ نے 23 فروری 1987ء کو یہ انکشاف شائع کیا کہ اسرائیل نے پاکستانی...
نیٹو کی جنگی مشقوں کے علاوہ ایف 16 اور رافیل جیٹس کبھی کسی بھی فضائی لڑائی میں...
سنہ 1953ء میں پاک فوج میں امریکن آرمی کی مدد سے پہلا ایلیٹ کمانڈو یونٹ تشکیل دیا...

Comments

Leave a Reply

DEFENCE NEWS

MY INSTAGRAM

DEFENCE BLOG

error: Content is protected !!