بی جی پی کا 2021ء تک ہندوستان سے تمام مسلمانوں اور عیسائیوں کو ختم کرنے کا اعلان

بھارتیہ جنتا پارٹی کے رہنما راجیشور سنگھ نے کہا کہ ہم ہندو دھرم کے ماننے والوں کا عہد اور مشن ہے کہ ہم دسمبر 2021 تک ہندوستان سے مسلمانوں اور عیسائیوں کا وجود مکمل ختم کر کے رہیں گے

بی جے پی راہنما راجیشور سنگھ کا کہنا ہے کہ بھارتیہ جنتا پارٹی کے مطابق 2021 تک ہندوستان سے اسلام اور عیسائیت ختم کر دی جائے گی۔ خیال رہے کہ یہ بیان کسی غیر سرکاری ہندو دہشت گرد کا نہیں ہے۔ بلکہ یہ اس ہندو راہنما کا بیان ہے جو ہندوستان کے وزیر اعظم نریندرا مودی کی حکمران جماعت بھارتی جنتا پارٹی کا باقاعدہ رکن ہے۔ اور مسلمانوں سے دشمنی کا ایسا کھلا اظہار نریندر مودی کی جماعت بی جے پی اور اس کی حلیف آر ایس ایس کی طرف سے مسلسل ایک مدت سے کیا جاتا رہا ہے ۔

بھارتیہ جنتا پارٹی کے رہنما راجیشور سنگھ نے کہا کہ ہم ہندو دھرم کے ماننے والوں کا عہد اور مشن ہے کہ ہم دسمبر 2021 تک ہندوستان سے مسلمانوں اور عیسائیوں کا وجود مکمل ختم کر کے رہیں گے ۔ انہوں نے کہا کہ مسلمانوں یا عیسائیوں کو ہندوستان میں رہنے کا کوئی حق حاصل نہیں ہے۔

۔



۔
ہندوستانی مسلمانوں اور عیسائی رہنماؤں نے اس بی جی پی رہنما کے بیان پر شدید رد عمل کا اظہار کیا ہے ۔ جس نے ہندوستان کو صرف ہندوؤں کا ملک قرار دیکر اس ملک کو 20 کروڑ مسلمانوں اور 28 کروڑ عیسائیوں سے نسلی طور پر پاک کرنے کیلئے اپنی حکومت کی مذہبی شدت پسندانہ نیت پر کھلے عام فخر کیا ہے۔

یاد رہے کہ اس سے پہلے بھی کئی بار بھارت کی حکمران جماعت بھارتیہ جنتا پارٹی اور اس کی حلیف مذہبی شدت پسند ہندوتوا جماعتوں کے راہنماؤں کی طرف سے ایسی تششد آمیز دھمکیوں کا اعادہ کیا جاتا رہا ہے۔

 
اس بارے 2014 دسمبر میں بھارتی اخبارات اور عالمی پریس میں یہ خبریں شائع ہوئی تھیں کہ بھارتیہ جنتا پارٹی کی حلیف ایک تشدد پسند ہندوتوا جماعت دھرم جاگرن سمیتی ( ڈی جے ایس ) نے اعلان کیا تھا کہ وہ دسمبر 2021 تک ہندوستان سے اسلام اورع عیسائیت کا خاتمہ کر کے اس دیش کو ہندو راشٹر بنائے گی ۔
۔
آگرہ اجلاس میں دھرم جاگرن سمیتی نے اعلان کیا تھا کہ گر مسلمان اور عیسائی اس ملک میں رہنا چاہتے ہیں تو انہیں ہندو مذہب قبول کرنا پڑے گا۔ اس مذہبی شدت پسند ہندو تحریک مسلمانوں اور عیسائیوں کو ہندو بنانے کی ” گھر واپسی” پروگرام میں سب سے آگے ہے۔ بھارتی مسلمانوں کے مطابق یہ ہندو شدت پسند تحریک کئی مسلمانوں کو مبینہ طور پر ہندو مذہب میں داخل کر چکی ہے۔
 
یاد رہے کہ بھارتی جنتا پارٹی کے برسراقتدار آنے کے بعد سے ہندوستان میں آباد مسلمانوں اور عیسائیوں سمیت تمام غیر ہندو اقلیتوں کے ساتھ غیر منصفانہ سلوک اور ظلم و جبر کا سلسلہ جاری ہے۔ اس حوالے سے بابری مسجد کی شہادت جیسے واقعات اور کشمیر میں مسلمانوں کا وحشیانہ قتل عام اسی شدت پسند ہندوتوا پروگرام کا حصہ ہے، جس کا بار بار اظہار سیکولرازم کے داعی بھارت کے وزیر اعظم نریندرا مودی کے قریبی ساتھیوں اور بھارتیہ جنتا پارٹی کے رہنماؤں کی طرف سے کیا جاتا ہے۔

پاکستان کے عسکری اداروں کے بارے میرا یہ کالم بھی پڑھیں

خود سے بے خبر سی آئی اے اور دنیا سے باخبر آئی ایس آئی

DEFENCE ARTICLES

جے ایف - 17 کے جدید ورژن بلاک 3  میں فضا سے فضا میں مار کرنے والے...
According to Pakistan armed forces media wing, Pakistan conducted a successful flight test of the Shaheen 1-A,...

1 COMMENT

Leave a Reply

DEFENCE NEWS

OUR INSTAGRAM

DEFENCE BLOG

OUR GULF ASIA NEWS SITE

GULF ASIA NEWS

1 COMMENT

Leave a Reply