پاکستان کے ایٹمی اسلحہ بردار زمینی ، بحری اور فضائی کروز میزائیل

کروز میزائل جیٹ انجن اور ایروڈائنامک لفٹ کے سہارے پرواز کرنے والا ایسا بغیر پائلٹ ہتھیار بردار ڈرون ہے جسے دور دراز کے اہداف...

پاکستان کے ٹیکٹیکل ایٹمی ہتھیار حتف اور نصر بھارتی جارحیت کیلئے سڈن ڈیتھ

چین کے ہاتھوں بھارت کی حالیہ شکستوں کے بعد لداخ کی ہمالیائی سرحدوں کا تناؤ بتدریج اروناچل پردیش ، سکم اور اتر اکھنڈ  تک...

پاک فضائیہ کے پاکستان میراج ری بلڈ فیکٹری میں اپ گریڈڈ میراج لڑاکا طیارے

پاک فضائیہ کا ملٹی رول فائٹر جیٹ میراج 3 اور 5 ورژن پچاس سال پرانا ہونے کے باعث کم اہمیت کا حامل سمجھا جاتا...

پی کے ۔ 15، جے ایف ۔ 17 اور الخالد سے ففتھ جنریشن سٹیلتھ پراجیکٹ عزم تک

عالمی دفاعی مبصرین کے مطابق پی کے 15 اسالٹ رائفل سے الخالد ٹینک اور جے ایف 17 تھنڈر تک پاکستان کی دفاعی پروڈکشن تیزی...

پاکستان ائرفورس کا تربیتی جیٹ اور شیر دل کا ایروبیٹکس طیارہ قراقرم ۔ 8

پاکستان ائر فورس میں فائٹرپائلٹس کی ٹریننگ کیلئے استعمال کیا جانے والا پاکستانی قراقرم ۔ 8 یا کے ۔ 8 پی ایک انٹرمیڈیٹ ٹرینر...

پاکستان کا الخالد ٹینک تباہ کن اٹیک اور جدید ترین ڈیفنس سسٹم کا زبردست امتزاج

الخالد ٹینک پاکستان آرمی کے زیر سروس ایسا جدید مین بیٹل ٹینک ہے، جسے ہیوی انڈسٹریز ٹیکسلا نے پاکستان میں تیار کیا ہے۔ الخالد...

پاک فضائیہ کے پاکستان میراج ری بلڈ فیکٹری میں اپ گریڈڈ میراج لڑاکا طیارے

جی ہاں ! 27 فروری 2019 کو اپریشن سوئفٹ ریٹارٹ میں بھارتی فضائیہ کے دو طیارے مار گرانے والی پاکستانی فضائی فارمیشن میں جے ایف ۔ 17 اور ایف ۔ 16 کا ساتھ دینے کیلئے چار میراج ۔ 5 طیارے بھی شامل تھے

- Advertisement -
پاک فضائیہ کا ملٹی رول فائٹر جیٹ میراج 3 اور 5 ورژن پچاس سال پرانا ہونے کے باعث کم اہمیت کا حامل سمجھا جاتا ہے۔ لیکن پاکستانی انجینئرز کی صلاحیتوں کی بدولت پاکستان ایروناٹیکل کمپلیکس کی میراج ری بلڈ فیکٹری میں اپ گریڈنگ کے بعد یہ طیارے آج بھی فضائی معرکوں میں اہم رول ادا کرنے کے اہل ہیں۔ اور یہ پاک فضائیہ کے ہوابازوں کی پیشہ ورانہ مہارت کا کمال ہے کہ وہ ایف 16، جے ایف 17 تھنڈر اور میراج سے بھی بھارتی رافیل مار گرانے کا ہنر اور صلاحیت رکھتے ہیں۔

دفاعی ماہرین کے مطابق ” انتہائی پھرتیلا طیارہ ” قرار دیا جانا والے میراج 3 ، 4 اور 5 طیارے دشمن کے علاقے میں راڈار پر نظر آئے بغیر اندر دور تک گھس کر بمباری اور تباہ کن میزائیل حملوں کی بھرپور صلاحیت رکھتا ہے۔

سنہ 1968-69ء میں پی اے ایف میں شامل ہونے والے یہ میراج طیارے 80ء کی دہائی میں پاک فضائیہ میں شامل ہونے والے اس دور کے جدید ترین طیاروں ایف 16 فالکن اور پھر پاکستان کے اپنے تیار کردہ جے ایف ۔ 17 تھنڈر جیسے جدید طیاروں کی موجودگی میں کم اہمیت اثاثہ سمجھا جانے لگے ہیں۔ لیکن فضائی ماہرین کے مطابق میراج طیارے کئی اہم خصوصیات کی وجہ آج بھی پاک فضائیہ کی سٹرائیک پاور کا اہم حصہ ہیں۔
 
ان کی اہمیت اور کارکردگی کا اندازہ اس امر سے لگایا جا سکتا ہے کہ 27 فروری 2019 کو اپریشن سوئفٹ ریٹارٹ میں بھارتی فضائیہ کے دو جنگی طیارے مار گرانے والی پاکستانی فضائی فارمیشن میں جے ایف ۔ 17 تھنڈر اور ایف ۔ 16 فالکن کا ساتھ دینے کیلئے چار میراج طیارے بھی شامل تھے۔ اور دنیا نے دیکھا یہ میراج طیاروں بھارت کے اندر دفاعی تنصیبات پر کامیاب بمباری کر کے بحافظت واپس لوٹ آئے
 

پاک فضائیہ میں ان کی اہمیت کی پہلی وجہ ملکی مالی وسائل کی کمی کے باعث نئے متبادل طیارے خریدنے میں مشکلات ہیں ۔ لہذا پاکستان نے میراج ری بلڈ فیکٹری میں ان طیاروں کی کئی اپ گریڈنگ سے انہیں اپنی دفاعی ضروریات کے قابل بنائے رکھا گیا ہے

 
یہ میراج طیارے پاکستان ائر فورس کیلئے کی سٹینڈ آف ویپن یعنی ساٹھ سے ایک سو بیس رینج تک مار کرنے والے ایچ ۔ 2 اور ایچ ۔ 4 گلائڈ بموں، 350 سے 550 کلومیٹرز تک مار کرنے والے رعد 1 اور رعد 2 ائر ٹو گراؤنڈ اٹیک کروز میزائیل داغنے کیلئے بہترین ڈیلیوری پلیٹ فارم سمجھے جاتے ہیں۔
 
پاک فضائیہ کے ان میراج طیاروں کی ایک خاص قابلیت ان کی بحری جہاز شکن اے ایم ۔ 39 ایگزوسٹ میزائل چلانے کی صلاحیت ہے۔ خیال رہے کہ میراج ۔ 5 پی ۔ اے 3 کے علاوہ رعد کروز میزائیل اور ایگزوسٹ میزائیل چلانے کی صلاحیت جے ایف ۔ 17 تھنڈر میں بھی ہے۔ انٹی شپ میزائیل لانچنگ صلاحیت کی بدولت ان میراج طیاروں کے سکواڈرن پاک بحریہ کی سپورٹ اور سمندری حدود کی حفاظت کیلئے مسرور ائر بیس کراچی پر ٹیکٹیکل ونگ 32 میں تعینات ہیں

بنیادی تفصیلات

لمبائی : 49،29 فٹ یعنی 15.03 میٹر
پنکھ یا پر : 26،96 فٹ یعنی 8.22 میٹر
اونچائی : 14،75 فٹ یعنی 4.50 میٹر
خالی طیارہ وزن : 15.540 پاؤنڈ یعنی 7،050 کلو
عمومی ٹیک آف 21.165 پاؤنڈ یعنی 9،600 کلو
زیادہ سے زیادہ ٹیک آف 30،205 پونڈ یعنی 13،700 کلو
ایندھن کی صلاحیت داخلی : 880 گیل یعنی 3،340 لیٹر 
میکسم پے لوڈ : 8220 پاؤنڈ یعنی 4،000 کلو
زیادہ سے زیادہ کی رفتار : 1،460 میل فی گھنٹہ یعنی 2،350 کلومیٹر فی گھنٹہ
کلائمبنگ ریٹ : 16.400 فٹ یعنی 5،000 میٹر فی منٹ
سروس سیلنگ یعنی زیادہ سے زیادہ بلندی 55.755 فیٹ

ہتھیار

ڈی ای ایف اے 30 ملی میٹر کی دو مین گنیں 125 آر ڈی ای اے
میزائلوں اور ہتھیاروں کیلئے اسٹیشنوں میں پانچ بیرونی ہارڈپوائنٹ
ایئر ٹو ایئر میزائل : اے آئی ایم 9 سائیڈونڈر ، مترا آر.530 ، مترا 550 میجک
ایئر ٹو سرفیس میزائل : اے ایس ۔ 30 ، اے ایس ۔ 37
بم لوڈ : 250 سے 400 کلو گرام
دیگر راکٹ اور پوڈ ، ای سی ایم پوڈ

اپ گریڈ روز ورژن کی تفصیل ۔

روز 2
ایچ یو ڈی، نیا ہیڈ اپ ڈسپلے سسٹم ۔ نئے ” تھروٹل اور اسٹک پر ہاتھ” کنٹرولز۔
نیا ملٹی فنکشن ڈسپلے ( ایم ایف ڈی ) ۔ ڈیرپلی اسکرین پر نئے نیویگیشن سسٹم بشمول ایک اٹیک نیویگیشن سسٹم ،ایک نیویگیشن ہیلپ ہے جو کمپیوٹر ، موشن سینسر (ایکسلروومیٹر) اور گردش سینسر (گائروسکوپس) کے استعمال سے پوزیشن ، مقام کی سمت کی مسلسل انفارمیشن ۔
دشمن کے حملہ آور میزائیل کی انفارمیشن کیلئے نیا راڈار وارننگ دینے والا الیکٹرانک کاؤنٹر سسٹم ، آر ڈبلیو آر ، ای سی ایم ، ایف آئی آر گریفو ایم 3 ریڈار
بی وی ار یعنی بصری حدود سے ورا سسٹم صلاحیت 
لوڈ آف میزائیل : 70 سے 180 کلومیٹرز کیلئے اے ایم 3 سائیڈ وائنڈر اور اے آئی ایم 9 ایل ، رعد 1 ، رعد 2 کروز میزائیل لوڈ کی صلاحیت
کم سطح بلندی سے ائر اینڈ گراؤنڈ سٹرائیک کی اہلیت میں اضافہ
سیجیم آیف ایل آئی آر فارورڈ سسٹم – لیکنگ انفرا ریڈ  سسٹم 
روز 2 ورژن میں اندھیرے میں کاروائی اور ریڈار سے بچنے کیلئے انتہائی کم بلندی پر محفوظ پرواز کی صلاحیت ہے۔

روز 3 اپ گریڈ

 ایویونکس نیویگیشن سسٹم میں بہتری کیلئے جدید تر اپ گریڈنگ اور نیا سویٹ ایس اے جی ای ایم سسٹم 
میراج 5 روز3 کے طیاروں میں رات کے اندھیرے میں سٹرائیک مشن کیلئے روز 2 سے جدید تر اپ گریڈڈ سسٹم نصب ہیں۔

ان میراج طیاروں کی تمام تر شاندار صلاحیتوں کے باوجود پاک فضائیہ کو جدید سے جدید تر بنانے کے رواں عمل کو آگے بڑھانے کیلئے ان کی جگہ پاکستان کے اپنے تیار کردہ جے ایف ۔ 17 تھنڈر طیارے لیں گے

تحریر : فاروق رشید بٹ

FAROOQ RASHID BUTThttp://thefoji.com
Farooq Rashid Butt alias Farooq Darwaish is an ex banker, a defence analyst, journalist, patriotic blogger, poet and freelancer WordPress web designer. A passionate flag holder of peace of the world

DEFENCE ARTICLES

دنیا کے جدید ترین طیاروں سے لیس ہندوستانی فضائیہ طیاروں اور عملے کی تعداد کے اعتبار سے...
مل ماسکو ہیلی کاپٹر پلانٹ روس کا تیار کردہ ایم آئی ۔ 35 ایم ملٹی رول اٹیک...
اسرائیلی اخبار یروشلم پوسٹ نے 23 فروری 1987ء کو یہ انکشاف شائع کیا کہ اسرائیل نے پاکستانی...
نیٹو کی جنگی مشقوں کے علاوہ ایف 16 اور رافیل جیٹس کبھی کسی بھی فضائی لڑائی میں...
سنہ 1953ء میں پاک فوج میں امریکن آرمی کی مدد سے پہلا ایلیٹ کمانڈو یونٹ تشکیل دیا...
پاکستان ڈیفنس ذرائع کے مطابق چین نے پاکستان کو جدید وی ٹی - 4 مین بیٹل ٹینکوں...

Comments

Leave a Reply

DEFENCE NEWS

فرانس نے پاکستانی میراج طیارے اور اوگسٹا ابدوزیں اپ گریڈ کرنے سے انکار کر دیا

پاکستانی عوام اور حکومت نے فرانسیسی صدر ایمانوئل میکرون کے اسلام کیخلاف متنازعہ بیانات پر کڑی تنقید کی ہے۔ حکومت نے عوام کی طرف...

شکست خوردہ آرمینی فوج نے کاراباخ چھوڑتے ہوئے گھر ہسپتال اور جنگلات نذرِ آتش کر دیے

روس کی مداخلت اور ثالثی میں آذربائیجان اور آرمینیا کے درمیان طے پانے والے جنگ بندی کے سمجھوتے کے مطابق شکست خوردہ آرمینی مقبوضہ...

آذربائیجان جنگ کے ہیرو ٹی بی 2 ترک ڈرون اور پاک ترک دوستی سے خوف زدہ بھارت

دنیا کے جدید اسلحہ ساز حیرت زدہ تھے جب آذربائیجان کے ڈرون حملوں نے آرمینی دفاع کو مکمل تباہ و برباد کر کے اسے...

امریکی ایف 22 ریپٹر ، چینی جے 20 اور روسی ایس یو 57 میں ففتھ جنریشن فضائی برتری کی دوڑ

امریکی ایف 22 ریپٹر دنیا کا پہلا ففتھ جنریشن لڑاکا طیارہ ہے۔ جو کچھ دہائیوں کیلئے فضائی برتری حاصل کر لے گا۔ 2006 میں...

DEFENCE BLOG